امریکا بھارتی زبان بول رہا ہے، دونوں کا کشمیر پر ایک ہی موقف ہے:ناصر جنجوعہ

دہشتگردی کیخلاف جنگ میں پاکستان نے بھاری نقصان اٹھایا، دنیا نے ہماری قربانیوں کو قدر کی نگاہ سے نہیں دیکھا، پاکستان میں دہشتگردی امریکا اور مغرب کا ساتھ دینے کی وجہ سے ہوئی: مشیر قومی سلامتی کا تقریب سے خطاب

اسلام آباد: مشیر قومی سلامتی ناصر جنجوعہ کا کہنا ہے امریکا بھارت کی زبان بول رہا ہے، مسئلہ کشمیر پر امریکا اور بھارت مؤقف ایک ہے۔ انہوں نے کہا امریکا سی پیک کی مخالفت کر رہا ہے اور چین کا اثر و رسوخ کم کرنا چاہتا ہے۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مشیر قومی سلامتی ناصر جنجوعہ نے کہا پاک بھارت تعلقات اچھے ہونا ضروری ہیں، اچھے باہمی تعلقات خطے کے مفاد میں ہیں۔ انہوں نے کہا پاکستان کے جوہری پروگرام کو تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے، پاکستان کو سب سے پہلے درپیش چیلنجز سے نمٹنا ہو گا۔ ان کا کہنا تھا کراچی پاکستان کا معاشی حب ہے، یہاں امن و امان کی صورتحال بہتر ہوئی ہے، بلوچستان کے حالات میں بھی بہتری آئی ہے، آج شرپسند عناصر ہتھیار ڈال رہے ہیں۔

مشیر قومی سلامتی نے کہا پاکستان میں دہشتگردی امریکا اور مغرب کا ساتھ دینے کی وجہ سے ہوئی، امریکا افغانستان میں شکست کا الزام پاکستان پر لگا رہا ہے۔ انہوں نے کہا دہشتگردی کیخلاف جنگ میں پاکستان نے بھاری نقصان اٹھایا لیکن دنیا نے دہشتگردی کیخلاف پاکستان کی جنگ کو قدر کی نگاہ سے نہیں دیکھا۔

ناصر جنجوعہ کا کہنا تھا افغانستان میں طالبان مزید مضبوط ہو رہے ہیں، افغانستان میں گزشتہ 40 سال سے امن کی صورتحال خراب ہے۔ مشیر قومی سلامتی نے کہا بھارت ہتھیاروں کا ذخیرہ کر رہا ہے، جنوبی ایشیا کی سلامتی دباؤ میں ہے۔ انہوں نے کہا مسلم ممالک بدقسمتی سے جنگوں کا شکار رہے، عراق میں بدامنی داعش کی وجہ سے ہوئی۔

واضح رہے تقریب میں بھارتی رہنماؤں کی پاکستان مخالف بیانات کی ویڈیود بھی کھائی گئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں