اوسلو لائبریری میں اجلاس، عاصمہ جہانگیر کو خراج تحسین پیش

عاصمہ جہانگیر کی جدو جہد کو خراج تحسین پیش کرنے کے لئے آج اوسلو لائبریری میں پاکستانیوں کی مختلف تنظیموں کے تحت اجلاس منعقد ہوا۔

اجلاس سے وژن فورم کے صدر ارشد بٹ، الما فاؤنڈیشن کی ٹینا شگفتہ، پاکستان فیملی نیٹ ورک کے صدر نثار بھگت، حلقہ ارباب ذوق کے صدر آفتاب وڑائچ، کاروان کے ایڈیٹر مجاہد علی، عطا انصاری، ڈاکٹر ندیم، چوہدری پرویز اقبال کے علاوہ متعد شرکا نے اظہار خیال کیا۔

مقررین کا کہنا تھا کہ عاصمہ جہانگیر کی انسانی حقوق کے لئے مثالی جدو جہد سے اوورسیز پاکستانی اپنے سر فخر سے بلند کر سکتے ہیں۔

مقررین نے کہا کہ عاصمہ جہانگیر کی معاشرے کے کچلے ہوئے طبقوں کے حقوق کے لئے قانونی اور سیاسی جدو جہد بھی اپنی مثال آپ ہے، انہوں نے خواتین کو معاشرے میں مساوی قانونی اور آئینی حقوق دلانے کے لئے کسی قربانی سے دریغ نہ کیا، انہیں بنیادی انسانی حقوق کے جدو جہد کی پاداش میں قیدوبند کی صعوبتیں بھی برداشت کرنا پڑیں۔

ارشد بٹ نے کہا کہ ہمیں عاصمہ جہانگیر کے انسانی برابری کے مشن کو ہر گز نہیں بھلانا چاہے، ٹینا شگفتہ نے کہا کہ عاصمہ کا نام خواتین کے لئے جرات اور حوصلے کی علامت بن چکا ہے، مقررین کا کہنا تھا کہ پاکستان مظلوموں، دبے کچلے طبقوں کی سب سے مضبوط آواز سے محروم ہو گیا ہے۔

اجلاس میں ایک قرار داد کے ذریعے عاصمہ جہانگیر کی لازوال جدو جہد کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے ان کے پیغام کو عوام تک پہنچانے کا مشن جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں