جہاں گائے کٹے گی، وہیں قصائی بھی کٹے گا، گئورکشکوں کا اعلان

نئی دہلی: دہلی کے رام لیلا میدان میں راجستھان گئو رکشا کمانڈو فورس کے ایس ایس ٹائیگر نے کہا کہ جہاں بھی گائےکٹتی ہوئی ملے گی فوراً قصائی کو بھی گولی ماردی جائیگی۔ انہوں نے قانون کی دھجیاں اڑاتے ہوئے کہا کہ ہمیں کسی قانون یا دستور کی پروانہیں،جہاں گائے کٹے گی، وہیں قصائی کٹے گا۔ ایک طرف ملک میں کروڑ روپے کی گھپلے بازی کا بازار گرم ہے تو دوسری جانب شرپسند عناصرفرقہ پرستی کے مسائل میں عوام کو الجھانے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں۔ گائے کے نام پرلنچنگ اور پرہجوم قتل و غارتگری کے بڑھتے ہوئے واقعات پر حکومت تماشائی بنی ہوئی ہے۔ گئو رکشک اتنے دیدہ دلیر ہوچکے ہیں کہ حکومت، قانون اور انتظامیہ کو چیلنج کرنے لگے ہیں۔دہلی کے رام لیلا میدان پرایک تقریب میں شرکت کے بعد ٹائیگر نے کہا کہ ہمیں تو صرف سنتوں کے حکم کا انتظار ہے۔ایس ایس ٹائیگرنےمزید کہا کہ وزیر اعظم مودی نے اگرگائے کو ’مادر وطن ‘ قرار نہیں دیا اور گائے کےذبیحہ پر پابندی نہیں لگائی تو پھر نہ کوئی تحریک چلائی جائیگی نہ ہی دھرنا۔ایس ایس ٹائیگرنے ملک کے قانون کو چیلنج کرتے ہوئے کہا کہ ملک کا قانون پھانسی چڑھا دے یا جیل میں ڈال دے ہمیں اس کی پروا نہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں