سائنسدان دماغ کے کینسر کے علاج کی دریافت کے قریب

لندن: (سنہرادور آن لائن) برطانوی سائنسدان کا کہنا ہے وائرس کے ذریعے دماغ کے ایک ایسے کینسر کا علاج ممکن ہے جو اب تک لاعلاج تھا۔ اِس طریقہ علاج کو ریو وائرس تھراپی کا نام دیا گیا ہے۔

برطانوی سائنسدان دماغ کے کینسر کے علاج کی دریافت کے قریب ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ یہ علاج ایک وائرس کے ذریعے ممکن ہو سکتا ہے۔ ریو وائرس کے جسم میں جانے کے بعد ہلکے فلو جیسی علامات پیدا ہوتی ہیں۔

ابتدائی تحقیق کے مطابق یہ وائرس جسم کے دفاعی نظام کو متحرک کر کے اسے دماغ میں موجود کینسر کے خلیوں کی طرف متوجہ کر دیتا ہے،اور یہ دفاعی نظام اس پر حملہ کر دیتا ہے۔

وائرس کو براہ راست دماغ میں داخل کرنے کے بجائے خون میں شامل کیا جاسکتا ہے۔ ریو وائرس کینسر زدہ خلیوں کو نشانہ بناتا ہے اور زیادہ تر صحت مند خلیوں کو نقصان نہیں پہنچاتا۔ برطانیہ میں اب تک دس افراد پر یہ طریقۂ علاج آزمایا جا چکا ہے۔

کیٹاگری میں : صحت

اپنا تبصرہ بھیجیں