ستارہ شجاعت حاصل کرنے والے بہادر طالب علم اعتزاز حسن کی چوتھی برسی سادگی سے منائی گئی

ہنگو : نہم جماعت کے بہادر طالب علم اعتزاز حسن کی چوتھی برسی حکومتی حلقوں کی جانب سے نظر انداز ہونے پر سادگی سے منائی گئی۔ برسی کے موقع پر صدقہ اور قرآن خوانی کا اہتمام کیا گیا۔ والد اور بھائی کا حکومتی حلقوں اور سرکاری افسران کی جانب سے کئے گئے وعدے پورے نہ کرنے اور نظر انداز کرنے پر افسوس کا اظہار کیا گیا ، بہادر لڑکےنے6 جنوری 2014کو اسکول پر خودکش حملہ روکا اور اپنی جان کی قربانی دیکر سیکڑوں مائوں کی گود اجڑنے سے بچائیں۔ تفصیلات کے مطابق حکومت پاکستان کی جانب سے ستارہ شجاعت حاصل کرنے والے ہنگو ابراہیم زئی گورنمنٹ ہائی سکول کے نہم جماعت کے طالب علم اعتزاز حسن کی چوتھی برسی انتہائی سادگی کے ساتھ ابراہیم زئی میں ان کی رہائش گاہ پر منائی گئی۔ برسی کے موقع پر اعتزاز حسن کے ایصال ثواب کے لئے صدقہ اور قرآن خوانی کا اہتمام کیا گیا تھا۔ اعتزاز احسن کے والد مجاہد علی اور بھائی مجتبیٰ حسن نے کہا کہ اعتزاز حسن نے 6جنوری2014 کو اعلیٰ الصبح ایک خودکش حملہ آور کو ہنگو کے علاقہ ابراہیم زئی میں گورنمنٹ ہائی سکول کے اندر جانے سے روکتے ہوئے اپنی جان کی قربانی دیکر سیکڑوں مائوں کی گود اجڑنے سے بچائیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں