سری نگر میں بھارتی سیاحوں کیلئے مفت رہائش

بھارتی فوج کی جارحیت کے باوجود مقبوضہ کشمیر میں  بھارتی سیاحوں کے لئے احسن اقدام عمل میں آیا ہے۔

پاکستان اور بھارت کے درمیان جاری کشیدگی کےپیشِ نظر مقبوضہ کشمیر کے علاقے سرینگرکے ایئرپورٹ اور ہائی وے بند ہیں جس کے باعث کشمیر میں موجود کئی سیاح پھنسے ہوئے ہیں جن میں سے کئی کا تعلق بھارت اور کچھ کا پاکستان سے ہے۔سیاحوں کی واپسی فی الحال مزید تاخیر کا شکار ہوسکتی ہے۔

مقبوضہ کشمیر کے ایک ہوٹل کلب کےچیئرمین نے یہ اعلان کیا کہ ان کےہوٹل میں تمام سیاح آکر رہ سکتے ہیں کیونکہ انہیں اطلاعات موصول ہوئی ہیں کہ سیاحوں کے پاس پیسے اور اشیاضرورت ختم ہو گئیں جس کے باعث انہیں رہائش اور کھانے پینے کی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

سری نگر میں بھارتی سیاحوں کیلئے مفت رہائش

مشتاق گھایا کے اس اعلان کے بعد مزید کئی ہوٹلوںجن میں ہوٹل قیصر بھی شامل ہے کہ کے مالکان نے سرینگر میں پھنسے سیاحوں کے لیے اپنے دروازے کھول دیے ہیں جن کے اس اقدام کو سوشل میڈیا پر بھی پذیرائی حاصل ہورہی ہے۔

بھارت کے معروف مصنف اشوک کمارپانڈے نے ٹوئٹ کیا کہ’کشمیریوں کی مہمان نوازی کو سلام پیش کرتا ہوں‘۔

اپنا تبصرہ بھیجیں