شہری بنیادی حقوق سے آگاہ نہیں، چیف جسٹس کا لاہورمیں خطاب

چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثار کا کہنا ہے کہ شہریوں کے بنیادی حقوق کا تحفظ عدلیہ کی ذمے داری ہے، لیکن عدلیہ بنیادی حقوق کا نفاذ کرتی ہے تو کہا جاتا ہے کہ عدلیہ مداخلت کررہی ہے ۔

چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثارلاہورمیں اعلیٰ حکومتی عہدےداروں کے رہائشی علاقے جی او آر ون میں جسٹس ریٹائرڈ فضل کریم کی کتاب کی تقریبِ رونمائی سے خطاب کر رہے تھے۔

تقریب میں لاہور ہائی کورٹ کے ججز اور عدالتی افسروں نے شرکت کی، جسٹس ثاقب نثارنےکہا کہ شہری بنیادی حقوق سے آگاہ نہیں، انتظامیہ کی ذمےداری ہے کہ وہ لوگوں کے بنیادی حقوق کا تحفظ کرے۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ عدلیہ شہریوں کے بنیادی حقوق کے تحفظ کی ذمے دار ہے اور اپنے آئینی دائرہ اختیار کے اندر رہ کر کام کرتی ہے، لیکن جب عدلیہ بنیادی حقوق کا نفاذ کرتی ہے تو کہا جاتا ہے کہ عدلیہ مداخلت کرتی ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں