صادق سنجرانی چیئرمین سینیٹ منتخب، ظفر الحق کو شکست

اسلام آباد: چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کیلئے ووٹنگ مکمل ہوگئی۔ بلوچستان سے آزاد سینیٹر ز گروپ اور اپوزیشن اتحاد کے مشترکہ امیدوار صادق سنجرانی چیئرمین سینیٹ منتخب ہوگئے۔ ن لیگ کے راجہ ظفر الحق شکست کھا گئے۔ ایوان نے صادق سنجرانی کو کامیابی پر مبارکباد پیش کی ۔ ووٹنگ کے دوران ایک موقع پر جے یوآئی ف کے مولانا عبدالغفور حیدری سمیت 3 سینیٹرز ایوان سے چلے گئے اور ووٹ کاسٹ نہیں کیا جس پر ن لیگ کے حلقوں میں پریشانی نظر آئی بعد ازاں جے یو آئی ف کے سینیٹرو ں نے واپس آکر ووٹ کاسٹ کیا۔سینیٹ میںمسلم لیگ (ن) 33 نشستوں کے ساتھ اکثریتی جماعت ہے۔ پیپلز پارٹی کے سینیٹرز کی تعداد 20 اور تحریک انصاف کے 12 سینیٹرز ہیں جبکہ 17 آزاد سینیٹرز ہیں۔ ایم کیو ایم پاکستان کے 5، نیشنل پارٹی کے 5، جے یو آئی (ف) کے 4، پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے 5، جماعت اسلامی 2، اے این پی ایک، مسلم لیگ (ف) ایک اور بی این پی مینگل کا بھی ایک سینیٹر ہے۔ ایم کیو ایم پاکستان نے چیئرمین کے لئے صادق سنجرانی کی حمایت کا اعلان کیا جبکہ ڈپٹی چیئرمین کے لئے پیپلزپارٹی کے سلیم مانڈوی والا کو ووٹ دینے سے انکار کردیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں