’’قبائلی اضلاع میں 6 ماہ میں بلدیاتی انتخابات کرائینگے‘‘

خیبرپختون خواکے وزیر بلدیات شہرام ترکئی نے کہا ہے کہ قبائلی اضلاع میں 6 ماہ کے دوران بلدیاتی انتخابات کرائیں گے۔

پشاور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ پہلی مرتبہ قبائلی اضلاع میں اختیارات نچلے طبقہ کو دیں گے، پشاور کی خوبصورتی کے لیے سالانہ 5ارب روپے خرچ کریں گے۔

شہرام ترکئی نے بتایا کہ نیا بلدیاتی نظام جلد خیبرپختون خوا اور ضم شدہ قبائلی اضلاع میں لایا جائے گا، کوشش ہے کہ قبائلی اضلاع میں بلدیاتی انتخابات 6 ماہ میں کرائے جائیں۔

انہوں نے بتایا کہ ویلیج ، نیبر ہڈ اور تحصیل گورنمنٹ نظام لا رہے ہیں، اختیارات نچلے طبقے کو دیں گے، جس سے فاٹا ترقی کرے گا۔

خیبرپختون خوا کے دارالحکومت پشاور سے متعلق شہرام ترکئی نے کہا کہ شہر کی خوبصورتی کے لیے سالانہ 5 ارب روپے خرچ ہوں گے، جس سے سیاحت کو بھی فروغ ملے گا۔

وزیر بلدیات خیبرپختون خوا کا یہ بھی کہنا ہے کہ صوبے اور ضم شدہ قبائلی اضلاع میں بلدیاتی انتخابات کے بعد ترقی کی نئی راہیں کھلی گیں، تعلیمی اداروں میں اساتذہ، اسپتالوں میں طبی عملے کی حاضری یقینی بنائیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں