لوڈشیڈنگ ،دہشتگردی و دیگرمسائل حل کئے ہیں، احسن اقبال

وفاقی وزیرداخلہ احسن اقبال نے کہاہے کہ موجودہ حکومت نے گزشتہ پانچ سالوں کے دوران بجلی کے بحران کے خاتمے اور دہشت گردی پر قابو پانے کے حوالے کے نمایاں کامیابیاں حاصل کی ہیں۔

وہ ناروے کے دارالحکومت اوسلو میں سفارتخانہ پاکستان میں نارویجن پاکستانی کمیونٹی کے چیدہ چیدہ رہنماؤں اور سماجی شخصیات کے اجتماع سے خطاب کررہے تھے۔

احسن اقبال اپنے چارملکی دورے کے دوسرے مرحلے میں نارویجن حکام سے دہشت گردی کے خلاف اقدامات سمیت متعدد دوطرفہ امور پر بات چیت کے لیے گزشتہ روز دو روزہ دورے پر ناروے پہنچے تھے۔

کمیونٹی کے اجتماع میں وفاقی وزیر کے خطاب سے قبل ناروے میں پاکستان کی سفیر رفعت مسعود نے مہمان وزیرکا تعارف کروایا اور اسٹیج سیکریٹری کے فرائض ڈپٹی ہیڈ آف مشن زیب طیب عباسی نے انجام دیے۔

احسن اقبال نے کہاکہ جب 5سال قبل یہ حکومت برسر اقتدار آئی تو 6ہزار سے 7ہزار میگاواٹ بجلی ضرورت سے کم پیدا ہورہی تھی، پورے ملک میں لوڈشیڈنگ ہورہی تھی، اب بہت کم لوڈشیڈنگ ہورہی ہے۔

وفاقی وزیر نے مزید کہاکہ 5 سال قبل ملک میں دہشت گردی کی یہ حالت تھی کہ کراچی جیسے شہر سے سرمایہ کار و کاروباری لوگ بھاگ کر دبئی، ملائیشیا اور کینیڈا جارہے تھے،ایک سو کارخانے بند ہونے والے تھے، اب یہ کارخانے بحال ہوگئے ہیں، کراچی میں بھتہ مافیاکا راج خاتم ہوگیا ہے، اب دہشت گردی پر کافی حد تک قابو حاصل کرلیا گیا ہے اور دہشت گرد ملک سے بھاگ رہے ہیں۔

انہوں نے سی پیک کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ سی پیک سے 46ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کے منصوبے چین کے ساتھ طے ہوئے تھے جن میں 29ارب کی سرمایہ کاری پاکستان میں آچکی ہے، سی پیک سے پاکستان میں ترقی کی نئی راہیں کھلی ہیں۔

وفاقی وزیر کے سامنے نارویجن پاکستانی کمیونٹی کے رہنماؤں نے اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل پیش کئے۔

پاکستان یونین ناروے کے چیئرمین چوہدری قمراقبال نے اوورسیز پاکستانیوں سے متعلق نادرا، امیگریشن، پولیس، ریونیو، پراپرٹی و دیگرمتعلق مسائل وفاقی وزیرکے سامنے بیان کئے جن پر احسن اقبال نے یقین دلایا کہ وہ جتنا ممکن ہوسکا یہ مسائل حل کرنے کی کوشش کریں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں