میرا آرٹ ورک سرکاری سطح پر پروموٹ نہیں کیا جا رہا: رابی پیر زادہ کا شکوہ

گلوکاری کو خیر آباد کہنے والی رابی پیرزادہ نے شکوہ کیا ہے کہ ان کا آرٹ ورک سرکاری سطح پر پروموٹ نہیں کیا جا رہا۔

رابی پیرزادہ ٹوئٹر پر کافی فعال نظر آتی ہیں اور حال ہی میں انہوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹوئٹ کیا کہ جب میں نے ایک ٹوئٹ کی کہ میں پاکستان چھوڑ کر جا رہی ہوں، سب نے وائرل کر دی، مگر جب کہا کہ حکومتی آرٹ کلچر کے ادارے میرا آرٹ پروموٹ نہیں کر رہے، سفارش چاہیے توکوئی نہیں بولا؟

میں نے ایک ٹویٹ کی کہ میں پاکستان چھوڑ کر جا رہی ہوں سب نے وائرل کردی، مگر جب کہا کہ حکومتی آرٹ کلچر کے ادارے میرا آرٹ پروموٹ نہیں کر رہےسفارش چاہیے تو کوئ نہیں بولا۔ کیا مجھےمیرا آرٹ لیکر کسی اور ملک میں جانا ہوگا، اس کا جواب کون دیگا؟@ImranKhanPTI @fawadchaudhry @ace_national pic.twitter.com/t9JhlfVpRp

— Rabi Pirzada (@Rabipirzada) July 25, 2020
انہوں نے اپنی ٹوئٹ میں لکھا کہ کیا مجھے میرا آرٹ لے کر کسی اور ملک میں جانا ہوگا، اس کا جواب کون دے گا؟۔

رابی پیرزادہ نے ایک اور ٹوئٹ کیا جس میں انہوں نے کہا تھا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کے آفس سے دو دفعہ فون آیا مگر کوئی نتیجہ نہیں نکلا۔

عثمان بزدار کے آفس سے دو دفعہ فون آیا مگر نتیجہ سفر، کیا کوئ حکومت ہے بھی کہ نہیں۔ جو لوگ میرے آرٹ کے ساتھ یہ کر رہے ہیں وہ کتنے آرٹسٹ سے پاکستان کو محروم کر رہے ہیں۔ افسوس۔ کیا توجہ دلانے کیلیے کسی انڈین آرٹسٹ کی ٹویٹ ضروری ہے۔@UsmanAKBuzdar

— Rabi Pirzada (@Rabipirzada) July 25, 2020
انہوں نے کہا کہ کیا کوئی حکومت ہے بھی کہ نہیں، جو لوگ میرے آرٹ کے ساتھ یہ کر رہے ہیں وہ کتنے آرٹسٹ سے پاکستان کو محروم کر رہے ہیں، افسوس، کیا توجہ دلانے کے لیے کسی بھارتی آرٹسٹ کی ٹوئٹ ضروری ہے؟

اپنا تبصرہ بھیجیں