پاکستان G-77 گروپ کا سربراہ بن گیا

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان ایک مرتبہ پھر 2018 کے لیے جنیوا میں جی-77 گروپ اور چینی گروپ برائے ترقی پذیر ممالک کا سربراہ اور نمائندہ ملک بن گیا۔

تنزانیہ سے تعلق رکھنے والے سفیر جیمز ایلکس سیکیلا نے اقوامِ متحدہ کے ادارہ برائے تجارت و ترقی (یو این سی ٹی اے ڈی) کے سیکریٹری جنرل مخیسہ کتوئی اور دیگر حکام کی موجودگی میں جی 77 گروپ کی سربراہی پاکستانی سفیر فرخ عامل کے لیے چھوڑ دی۔

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے وفود کا کہنا تھا کہ اقوامِ متحدہ کی جانب سے خطرات کے پیش نظر بنایا جانے والا اتحاد اب پہلے سے بھی زیادہ اہمیت کا حامل ہے۔

جینوا میں یو این سی ٹی ڈی میں منعقدہ اس تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فرخ عامل نے جی 77 میں نئی توانائی دینے کی ضرورت پر زور دیا ، جہاں اقوامِ متحدہ کو بھی چیلنجز کا سامنا ہے۔

انہوں نے ترقی پذیر ممالک پر زور دیا کہ وہ نئی ٹیکنالوجی پر توجہ مرکوز کرتے ہوئے انہیں حاصل کرنے کی کوشش کریں جس کا اقتصادی اور معاشی ترقی میں نمایاں کردار ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں