پنجاب حکومت کے ہیلتھ ورکرز سے مذاکرات کامیاب ،دھرنا ختم

پنجاب حکومت سے کامیاب مذاکرات کے بعد لیڈی ہیلتھ ورکرز نے پانچ روز سے مال روڈ پر جاری دھرنا ختم کردیا ۔

رہنما لیڈی ہیلتھ ورکرز نےکہا کہ خواتین نے عزم و ہمت کی نئی تاریخ رقم کی ہے، ہمارے مطالبات منظور ہوگئے ہیں، اس حوالے سے نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے ۔

سیکریٹری پرائمری اور سکینڈی ہیلتھ پنجاب علی جان نے اس سے قبل پریس کانفرنس میں کہا تھاکہ لیڈی ہیلتھ ورکرز کے تمام مطالبات تسلیم کرلئے ہیں اب دھرنا ختم کیا جائے ۔

سیکریٹری صحت نے اس حوالے مزید کہا کہ 4 بجے تک دھرنا ختم نہ کیا گیا تو ایکشن لیں گے ،ابتدائی طور پر مظاہرین کیخلاف محکمانہ کارروائی ہوگی ،پھر بات نہ مانی گئی تو قانونی کارروائی کریں گے۔

علی جان نے الزام لگایا کہ کچھ لوگ دھرنے سے سیاست چمکانا چاہتے ہیں،دھرنا ختم نہ کیا تو غیر حاضری لگا کر رولز کے مطابق ایکشن لیا جائےگا۔

سیکریٹری صحت پنجاب نے یہ بھی کہا کہ 2017ء سے لیڈی ہیلتھ ورکرز کو ریگولر کیا گیاتھا، یہ تاثر غلط ہے کہ ان کو کچھ سالوں سے تنخواہیں نہیں ملیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں