کراچی میں جرگے کے حکم پر نوجوان جوڑے کا قتل

کراچی میں مبینہ طور پر جرگے کے حکم پر نوجوان لڑکے اور لڑکی کو قتل کر دیا گیا،3 روز قبل حب ڈیم کے قریب سے خاتون اور مرد کی تشدد زدہ لاشیں برآمد ہوئی تھیں۔

پولیس کے مطابق 25 سال کا نصیب زر خان میٹروول کارہائشی تھا جس کا تعلق کالا ڈھاکا خیبر پختون خوا سے ہے جبکہ لڑکی بھی اسی کے گائوں سے تعلق رکھتی تھی اور دونوں ایک ہی محلے کے رہائشی تھے۔

خاتون کی شناخت بی بی دختر واحب سر کے نام سے کی گئی ہے جس کے اہلِ خانہ سے رابطہ نہیں ہو پارہا اورگھر پر کئی روز سے تالا لگا ہوا ہے۔

مقتول نصیب زر خان میٹروول کا رہائشی تھا اورجولائی2018 ءمیں گھر سے جھگڑا کر کے چلا گیا تھا۔

مقتول نوجوان کا صرف ایک مرتبہ اپنے گھر سے رابطہ ہوا تھا، جولائی میں مقتول کے گھر سے نکلنے کے ایک ماہ بعد محلے کی لڑکی بھی لاپتہ ہوگئی تھی۔

پولیس کے مطابق خاتون اور مرد کو گلے پر وار کرکے قتل کیا گیا جن کے غائب ہونے کے بعد جرگہ بلایا گیا اور مبینہ طور پر قتل کا فیصلہ کیا گیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ مقتولین کے گھروالوں نے دونوں کی گمشد گی سے متعلق کوئی رپورٹ نہیں کروائی تھی اور اب بھی لڑکے کے گھر والے مقدمہ درج کرانے سے گریز کر رہے ہیں۔

پولیس نے اپنی مدعیت میں نوجوان لڑکا لڑکی کے قتل کا مقدمہ درج کر لیا ہے، قانونی کارروائی کے بعد نوجوان کی لاش ورثاء کے حوالے کر دی گئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں