ایئر کوالٹی انڈیکس: کراچی، لاہور دنیا کے 10 آلودہ ترین شہروں میں شامل

فضائی آلودگی کے اعتبار سے بھارتی دارالحکومت نئی دہلی دنیا کا آلودہ ترین شہر بن گیا ہے، جبکہ سرِفہرست 10 شہروں میں لاہور اور کراچی بھی شامل ہیں۔

مذکورہ سروے امریکا کے ایئر کوالٹی انڈیکس کی جانب سے کیا گیا جس کے مطابق فضاء میں گرد کے ذرات (پی ایم 2.5) کی تعداد 35 مائیکرو گرام فی مکعب میٹر سے زائد نہیں ہونی چاہیے۔

ایک روز قبل ایک موقع پر لاہور کی فضاء میں ان ذرات کی تعداد 10 گنا تک بڑھ گئی تھی یعنی 330 مائیکروگرام تک پہنچ گئی تھی، جس کی وجہ سے یہ دنیا کا آلودہ ترین شہر بن گیا تھا۔

تاہم اب اس کی جگہ بھارتی دارالحکومت نئی دہلی نے لے لی جس کی اس وقت فضاء میں گرد کے ذرات کی تعداد 440 مائیکروگرام ریکارڈ کی گئی ہے جبکہ لاہور کی 227 مائیکرو گرام ہے۔

درجہ بندی کے مطابق 151 سے 200 درجے تک آلودگی مضرِ صحت ہوتی ہے جب کہ 201 سے 300 درجے تک انتہائی مضر صحت اور 301 سے زائد درجہ انتہائی خطرناک ہوتا ہے۔

فضائی آلودگی جانچنے والے دنیا کے معتبر ادارے آئی کیو ائیر کی رپورٹ کے مطابق نئی دہلی فضائی آلودگی میں سرفہرست ہے جہاں ہوا میں آلودگی کی سطح صحت کیلئے انتہائی خطرناک سطح پر ہے۔

انڈیکس کے مطابق اس وقت نئی دہلی میں یہ 440 درجے پر ہے جو انتہائی خطرناک صورتحال ہے، دہلی میں فضائی آلودگی کی وجہ دیوالی کے تہوار کو قرار دیا جارہا ہے جس میں خوشیاں منانے کے لیے گزشتہ دنوں بڑی تعداد میں آتش بازی کی گئی تھی۔

آئی کیو ائیر کی فہرست میں 10 آلودہ ترین شہروں میں پاکستان کے 2 بڑے شہر لاہور اور کراچی بھی شامل ہیں۔

لاہور 227 مائیکرو گرام گرام آلودگی کی وجہ سے دوسرے جبکہ کراچی 159 مائیکروگرام آلودگی کے ذرات فضا میں ہونے کی وجہ سے اس فہرست میں 7ویں نمبر پر ہے۔

اس فہرست میں ویتنام کا شہر ہنوئی، بوسنیا کا سرائیوو، بنگلہ دیش کا ڈھاکا اور مراکش کا جکارتہ بالترتیب تیسرے، چوتھے، پانچویں اور چھٹے نمبر پر ہیں۔

یہ اعدادوشمار 29 اکتوبر کی رات 10 بجکر 22 منٹ تک کے ہیں جو امریکی ائیر کوالٹی کی ویب سائٹ سے لیے گئے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں