قبضہ مافیا کے خلاف ایکشن، قیمتی سرکاری اراضی وا گزار، ملزمان گرفتار

حسن ابدال(سنہرا دور): قبضہ مافیا کے خلاف ایکشن محکمہ متروکہ وقف املاک حسن ابدال نے کروڑوں روپے مالیت کی سرکاری اراضی واگزار کروا لی۔ محکمہ متروکہ وقف املاک حسن ابدال کے عملہ نے مذکورہ راضی جس پر ایک عدرلکری کا ٹال اور چار دوکانات تعمیر شدہ تھیں جن میں مختلف لوگ اراضی پر قبضہ کرنے والے محمد آصف نامی شخص کے کرائے دار تھے ان دوکانات کو سیل کرنے کے بعد محکمہ متروکہ وقف املاک نے اپنے سیکورٹی گارڈ تعینات کر دیے رات گئے محمد آصف اس کے بیٹے محمد حماد اور دیگر افراد نے مل کر متروکہ وقف املاک کے سیکورٹی گارڈ پر حملہ کر دیا اور ان کو شدید زخمی کرتے ہوئے دوکانات کی سیلین توڑ دی دیں جس پر متروکہ وقف املاک کے دیپتی ایڈمنسٹریٹر ملک انوار الحق اور انسپکٹر نے مقامی پولیس سٹیشن میں آصف اور اس کے بیٹے حماد کے خلاف زیر دفعہ 447 511 353 186 506 مقدمہ درج کروا دیا محمد کاشف ایس ایچ او تھانہ سٹی حسن ابدال نے فوری ایکشن لیتے ہوئے محمد آصف اور حماد آصف کو گرفتار کرلیا جبکہ متروکہ وقف املاک کے زخمی اہکاروں ممروز خان اور محمد طاہر کو مقامی ہاسپٹل میں میڈیکل کے لئے بھجوا دیا گیا-یاد رہے کہ متروکہ املاک کے موجودہ چیئرمین ڈاکٹر عامراحمد نے ملک بھر میں متروکہ وقف املاک کے تمام دفاتر اور ملازمین کو خصوصی ہدایات جاری کی ہیں کہ وہ محکمہ کی اراضی کو فوری طور پر ناجائز قابضین سے واگزار کرائیں تاکہ محکمہ کی اراضی کا تحفظ کیا جاسکے اس حوالے سے ڈپٹی ایڈمنسٹریٹر حسن ابدال ملک انوار الحق اور ایڈمنسٹریٹر راولپنڈی زون چودھری تنویر حسین نے ڈویژن بھر میں چیئرمین کےاحکامات کی روشنی میں عملی اقدامات کا آغاز کردیا ہے اور انھوں نے بتایا کہ وہ محکمے کی اراضی کے تحفظ کے لیے ہر قانونی طریقہ کار اختیار کریں گے تاکہ قبضہ مافیا سے نجات مل سکے.

اپنا تبصرہ بھیجیں