پاکستان کا سرحدیں مزید 2 ہفتے کے لیے بند رکھنے کا فیصلہ

پاکستان نے ایران اور افغانستان کے ساتھ اپنی سرحدیں مزید 2 ہفتے کےلیے بند رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے قومی سلامتی معید یوسف نے جیو نیوز سے گفتگو میں سرحدیں بند کرنے کا اعلان کیا۔

معید یوسف نے کہا کہ 28 مارچ کو فیصلہ کیا گیا تھا کہ ملکی سرحدیں 11 اپریل تک کےلیے بند رہیں گی، آج فیصلہ کیا گیا ہے کہ انہیں 11 اپریل کے بعد مزید 2 ہفتے بند رکھا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ فیصلے میں 6 سے 9 اپریل کا استثنیٰ دینے کا کہا گیا ہے، دراصل افغانستان کی حکومت نے اس دوران چمن اور طور خم سرحد کھولنے کی درخواست کر رکھی ہے۔

وزیراعظم کے معاون خصوصی نے مزید کہا کہ درخواست ان افغان شہریوں کے لیے کی گئی جو عارضی وقت کے لیے پاکستان آئے ہوئے تھے اور واپس جانا چاہتے تھے، یہ عمل جاری ہےجو کل ختم ہوجائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ افغان حکومت کی خصوصی درخواست پر جو خوراک کا مال جاتا ہے اس حوالے سے لائحہ طے کیا جارہا ہے، جس کے بعد فوڈ ٹرانزٹ افغانستان جاسکیں گی۔

معید یوسف نے یہ بھی کہا کہ افغانستان فوڈ ٹرانزٹ کے حوالے سے مکمل پراسس طے پایا ہے تا کہ واپسی پر وہ ہمارے لیے خطرہ نہ بنیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں