وزیراعظم کی تقریر غیر تسلی بخش تھی، سعید غنی

سندھ حکومت نے کورونا سے متعلق وفاقی حکومت کے اقدامات پر عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم کی تقریر کو غیر تسلی بخش قرار دیا ہے۔

پیپلز پارٹی کے رہنما سعید غنی نے پروگرام آج شاہزیب خانزادہ کیساتھ میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جو فیصلے سندھ حکومت نے آج اٹھائے ہیں 15 دن بعد وفاقی حکومت کو کرنا پڑیں گے، ہمیں امید تھی کہ وفاقی حکومت بھی سندھ حکومت جیسے اقدامات اُٹھائے گی لیکن شاید انہیں سنگینی کا اندازہ نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت کے فیصلوں سے لوگوں کو تکلیف ہوگی، لیکن اس وقت یہ اقدامات نہ اُٹھائے جاتے تو بعد میں نقصان بہت زیادہ ہوتا۔

واضح رہے کہ کوروناوائرس پر قوم سے خطاب میں وزیر اعظم عمران خان نے کہا تھا کہ ہمارے معاشی حالات ٹھیک نہیں، امریکا اور یورپ کی طرح ہم شہر بند کرتے تو حالات اور بھی خراب ہوجاتے اور عوام بھوک سے مرتے۔

پاکستان میں کورونا کی صورتحال
اس وقت ملک بھر میں کورونا وائرس کےمریضوں کی مجموعی تعداد 244 ہوگئی ہے۔ پنجاب میں 24 گھنٹے کے دوران 25، سندھ 17، بلوچستان میں مزید 6 افراد میں کورونا وائرس ٹیسٹ مثبت آیا ہے۔ سندھ میں مجموعی طور پر کیسز کی تعداد 172 ہوچکی ہے۔ پنجاب میں کورونا وائرس کے 26 کیسز کی تصدیق ہوچکی ہے۔

بلوچستان میں 6 مزید کیسز رپورٹ ہونے کے بعد کورونا متاثرین کی تعداد 16 ہوگئی ہے۔ خیبرپختونخوا میں بھی 16، اسلام آباد 4 اور گلگت بلتستان میں کورونا کے 3 مریض سامنے آچکے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں