ایسٹرا زینیکا ویکسین کے بچوں پر ٹرائل روک دیے گئے

ممکنہ بلڈ کلاٹس کی شکایات پر برطانوی ایسٹرا زینیکا ویکسین کے بچوں پر ٹرائل روک دیے گئے۔

آکسفورڈ یونیورسٹی کا کہنا ہے کہ ٹرائلز کی سیفٹی پر تحفظات نہیں، مزید معلومات کے منتظر ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق 6 سے 17 سال کے بچوں پر تجربات فروری میں شروع ہوئے تھے۔ ٹرائلز کا مقصد ویکسین سے پیدا ہونےوالی مدافعت کا جائزہ لینا تھا۔

ادھر یورپی میڈیسن ایجنسی نے برطانوی کورونا ویکسین ایسٹرازینیکا اور خون میں پھٹکیاں بننے کے درمیان تعلق کی تصدیق کر دی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں