سرکاری اراضی کے چوکیدار ہیں،خورشید شاہ

سکھر…قومی اسمبلی میں سابق اپوزیشن لیڈر اور پیپلز پارٹی کے رہنما خورشید شاہ نے چیلنج کیا ہے کہ اگر کوئی مجھ پر یا خاندان کے کسی بھی فرد پر پلاٹ یا اراضی پر قبضہ ثابت کردے تو الیکشن سے دستبردار ہوجاوں گا۔ روہڑی میں ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے انہوںنے کہا کہ سرکاری اراضی کے چوکیدار ہیں۔ اس بات کو ہم نے ثابت کرکے دکھایا ہے۔ سکھر میں 9 ارب روپے کی سرکاری اراضی پر قبضے ختم کرائے ۔ انہوں نے کہاکہ پیپلز پارٹی نے اپنا منشور پیش کردیا ۔ زراعت پر کوئی ٹیکس نہیں لگایا جائے گا۔ بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کو دگنا کریں گے۔سرکاری ملازمین کی تنخواہوں کو دگنا کریں گے۔ سابق اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ پہلے بھی صوبوں کو خود مختار بنایا ۔اب بھی اقتدار میں آکر انہیں خود مختار بنائیں گے۔ انہوں نے کہاکہ دولت کی سیاست ہم نے کبھی نہیں کی کیونکہ دولت سے کوئی سیاستدان نہیں بنتا اگر کوئی دولت سے سیاست دان بنتا تو پھر خورشید شاہ سیاستدان نہ ہوتا۔خورشید شاہ نے کہا کہ عمران خان بولر رہ چکے ہیں لیکن زلفی بخاری کے معاملے پرانہیں خود باونسر پڑ گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں