سندھ اسمبلی پر احتجاج کرنیوالے 15 وکلاء گرفتار

کراچی میں پولیس نے سندھ اسمبلی کے باہر احتجاج کرنے والے 15 وکلاء کو حراست میں لے لیا۔

پولیس کی بھاری نفری سندھ اسمبلی کے باہر موجود ہے جس نے سندھ اسمبلی کے باہر احتجاج کرنے والے وکلا کے خلاف کاررائی کی اور صبح سویرے انہیں حراست میں لیا۔

ڈنڈا بردار پولیس اہلکار بڑی تعداد میں سندھ اسمبلی کے باہر تعینات ہیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ رات بھی سندھ اسمبلی کے باہر احتجاج کرنے والے 47 سرکاری وکلاء کو پولیس نے گرفتار کرکے تھانے منتقل کیاتھا۔

ان تمام افراد کو مجسٹریٹ کے حکم پر 10 ہزار روپے کے مچلکوں پر رہا کردیا گیا تھا، رہا ہونے کے بعد مظاہرین نے دوبارہ سندھ اسمبلی کے باہر دھرنے کا اعلان کیا تھا۔

وکلاء کی گرفتاری کے بعد سندھ اسمبلی کا مرکزی دروازہ کھول دیا گیا اور پولیس کی بھاری نفری تعینات کردی گئی۔

سندھ اسمبلی کے مرکزی دروازے پر سرکاری وکلاء کئی روز سے الاؤنس نہ ملنے کے خلاف احتجاج کر رہے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں