نوازشریف بزدل ہے کوئی تحریک نہیں چلاسکتا ، عمران خان

تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نےکہا ہے کہ نوازشریف نے عدلیہ مخالف تحریک چلانے کا اعلان کیا ہے ،وہ بزدل ہے کبھی کوئی تحریک نہیں چلاسکتا ،ہر کرپٹ سیاستدان شریف برادران کے ساتھ کھڑا ہے ۔

اوکاڑہ میں جلسے سے خطاب میں پی ٹی آئی چیئرمین نے کہا کہ مشرف دور میں نواز شریف نے کون سی تحریک چلائی تھی؟ ن لیگ جسٹس عبدالقیوم والی عدلیہ چاہتی ہے، جسے شہباز شریف فون پر فیصلے لکھواتے تھے، ججوں کو چیف جسٹس سجاد کیخلاف اکسانے کے لیے شہباز شریف بریف کیس لے کر گئے ۔

ان کا مزید کہناتھاکہ نوازشریف تم عدلیہ کے خلاف نکلوگے تو میں تمہارے خلاف نکلوں گا، دیکھتے ہیں عوام کس کے ساتھ ہیں ،تمہیں وہ عدلیہ چاہیے جو تمہارے جرائم پر تمہیں نہ پکڑے ۔

پی ٹی آئی سربراہ نے ایک بار پھر استفسار کیا کہ نوازشریف بتائیں انہوں نے کس کو خوش کرنے کے لئے ختم نبوت قانون کو بدلنے کی کوشش کی ؟

عمران خان نےآئندہ الیکشن میں ن لیگ سے اچھے میچ ہونےکی امید کا اظہا ر کیا اور کہا کہ 2018ء کے الیکشن میں شہباز شریف امپائر ملالے تو بھی ہم اسے شکست دے دیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی بھی کرپشن میں شریف خاندان کے ساتھ ملا ہوا ہے ،میں شاہد خاقان سے پوچھتا ہوں تم وزیراعظم ہو یا شریف خاندان کے درباری ہو؟

عمران خان نے یہ بھی کہا کہ اسحاق ڈار کو سب پتہ ہے کہ نوازشریف کا پیسہ کہا ں کہاں ہے ،سابق وزیراعظم اسی وجہ سے سابق وزیر خزانہ سے ڈرتا ہے ۔

انہوں نے جلسہ عام سے خطاب میں جہانگیر ترین کو خراج تحسین پیش کیا اورکہا کہ سپریم کورٹ نے فیصلے میں کہا کہ جہانگیر ترین نے کرپشن اور ٹیکس چوری نہیں کی ۔

پی ٹی آئی چیئرمین نے مزید کہا کہ نوازشریف اس قوم کے مجرم ہیں،میں نے اپنے فلیٹ سے متعلق 60 دستاویزات دیں، لیکن سابق وزیراعظم نے اپنے 30 ہزار کروڑ کے جواب میں صرف قطری خط دیا ۔

ان کا مزید کہناتھاکہ اگر میں نے کے پی میں کبھی ایک ملازم بھی بھرتی کرایا ہو تو پارلیمنٹ چھوڑ دوں گا، نواز شریف جو کچھ کر رہا ہے وہ عوام کے لیئے نہیں، اپنی لوٹی ہوئی دولت بچانے کے لئے کر رہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں