کیلاش خواتین سے چھیڑ چھاڑ کا ملزم گرفتار

چترال پولیس نے بمبوریت میں کیلاش خواتین کو ہراساں کرنے والے ملزم کو پشاور سے گرفتار کر لیا ۔

ڈی پی او چترال منصور امان کے مطابق ایمل خان کو چترال کی لیڈی پولیس نے گرفتار کیا ،لیڈی پولیس سے گرفتاری کا مقصد ملزم کو یہ احساس دلانا تھا کہ چترال کی خواتین کمزور نہیں اور ان کو ہراساں نہیں کیا جاسکتا ۔

ڈی پی او منصور امان نے ان تمام لوگوں کو شکریہ ادا کیا جنہوں نے خواتین کو ہراساں کرنے جیسے اہم سماجی مسئلہ کو سوشل میڈیا پر اجاگر کیا ۔

ملزم ایمل خان کی چترال میں کیلاش خواتین کو تنگ اور ہراساں کرنے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی جس کے بعد پولیس ملزم کی گرفتاری کےلیے متحرک ہوگئی اور بالآخر ملزم کو گرفتار کر لیا گیا ۔

واضح رہے کہ چترال میں خواتین سے چھیڑ چھاڑ اور بدتمیزی کی ویڈیو منظرعام پر آئی تھی جس میں سیاح گلی سے گزرنے والی خواتین کی زبردستی ویڈیو اور تصاویر بنانے کی کوشش کر رہا تھا، خواتین کے انکار کے باوجود ملزم ویڈیو اور تصاویر بنانے کی کوشش کرتا رہا جبکہ ملزم نے خود کو پولیس اہل کار ظاہر کیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں